Zameen o zaman tumhare liye lyrics 330

زمین و زماں تمہارے لئے مکین و مکاں تمہارے لئے

زمین و زماں تمہارے لئے ، مکین و مکاں تمہارے لئے
چنین و چناں تمہارے لئے ، بنے دو جہاں تمہارے لئے

دہن میں زباں تمہارے لئے بدن میں ہے جاں تمہارے لئے
ہم آئے یہاں تمہارے لئے اٹھیں بھی وہاں تمہارے لئے

فرشتے خِدَم رسولِ حشم تمامِ اُمم غلامِ کرم
وجود و عدم حدوث و قدم جہاں میں عیاں تمہارے لئے

کلیم و نجی مسیح و صفی خلیل و رضی رسول و نبی
عتیق و وصی غنی و علی ثنا کی زباں تمہارے لئے

اصالتِ کُل امامتِ کُل سیادتِ کُل امارتِ کُل
حکومتِ کُل ولایتِ کُل خدا کے یہاں تمہارے لئے

تمہاری چمک تمہاری دمک تمہاری جھلک تمہاری مہک
زمین و فلک سماک و سمک میں سکہ نشاں تمہارے لئے

یہ شمس و قمر یہ شام و سحر یہ برگ و شجر یہ باغ و ثمر
یہ تیغ و سپر یہ تاج و کمر یہ حکمِ رواں تمہارے لئے

جناں میں چمن ، چمن میں سمن، سمن میں پھبن ، پھبن میں دلہن
سزائے محن پہ ایسے مِنن یہ امن و اماں تمہارے لئے

یہ فیض دیے وہ جود کیے کہ نام لیے زمانہ جیے
جہاں نے لئے تمہارے دیے یہ اکرمیاں تمہارے لئے

اشارے سے چاند چیر دیۓ چھپے ہوۓ خور کو پیر لئے
گئے ہوئے دن اثر کو کیا یہ تاب و تواں تمہارے لئے

صبا وہ چلے کہ باغ پھلے وہ پھول کھلے کہ دن ہو بھلے
لاوا کے تلے سناں میں کھلے رضا کی زباں تمہارے لئے

پوسٹ کو شیئر کریں۔۔