189

میرے رَشک قَمر ، تو نے پہلی نَظر

Mere Reshke Qamar Lyrics In Urdu
میرے رَشک قَمر ، تو نے پہلی نَظر

میرے رَشک قَمر ، تو نے پہلی نَظر ،جَب نظر سے ملائی مَزا آ گیا
برق سی گِر گئی ، کام ہی کر گئی ، آگ ایسی لگائی مَزا آ گیا
Mere rashke qamar, tu nay pahli nazar, jab nazar sy milae maaa agia
Burq si gir gae, kaam he kar gae, aag aisi lagai maza agia

جام میں گھول کر ، حسن کی مستیاں ، چاندنی مسکرائی مَزا آ گیا
چاند کے سائے میں ، اے مرے ساقیا ، تو نے ایسی پلائی مَزا آ گیا
Jam mae ghol kar,  hussan ki mastian, chandi muskarai maza agia
Chand kay saey mae, ay mery saqia, tu nay aisi pilae maza agia

نشہ شیشے میں اَنگڑائی لینے لگا ، بزم ِرِنداں میں ساغر کھنکنے لگا
میکدے پہ برسنے لگیں مستیاں ، جب گھٹا گھر کے آئی مَزا آ گیا
Nasha sheshy mae angrai leny laga, baz-e-rindan mae saghir khnakny laga
Mekady pay barsney lage mastiyan, jab ghata ghar mae aai maza a gia

بے حجابانہ وہ سامنے آ گئے ، اور جوانی جوانی سے ٹکرا گئی
آنکھ ان کی لڑی یوں مری آنکھ سے ، دیکھ کر یہ لڑائی مَزا آ گیا
Be hijaba na wo samny agay, or jawani jawani sy takra gae
Aankh un ki lari yu meri aankh sy, dekh kar ye larai maza agia

آنکھ میں تھی حیا  ہر ملاقات پر ، سرخ عارض ہوئے وصل کی بات پر
اس نے شرما کے میرے سوالات پہ ،  ایسے گردن جھکائی مَزا آ گیا
Aankh mae thi haya har mulaqat par, surkh aariz huway wasal ki baat par
Us nay sharma kay mery sawalat pay, aisy garden jhukai maza agia

شیخ‌ صاحب کا ایمان بک ہی گیا ، دیکھ کر حسن ساقی پگھل ہی گیا
آج سے پہلے یہ کتنے مغرور تھے ، لٹ گئی پارسائی مَزا آ گیا
Sheikh sahib ka eman bik he gia, dekh kar hussan saqi peghal he gia
Aaj sy pehly ye kitny maghroor thay, lut gae parsai maza agia

اے فناؔ شکر ہے آج باد فنا ، اس نے رکھ لی میرے پیار کہ آبرو
اپنے ہاتھوں سے اس نے مری قبر پہ ، چادر گل چڑھائی مَزا آ گیا
Ay fanah-e-shukar hai bad-e-fana, us nay rakh li mery pyar ky aabroo
Apny hatho sy us nay meri qabar par, aesay chadar charhai maza agia

پوسٹ کو شیئر کریں۔۔