257

جوڑوں کے درد کا گھریلوں اور سستا اعلاج

Jodo Ka Dard Ka Ilaj In Urdu
Joint Pain Treatment
جوڑوں کے درد کا گھریلوں اور سستا اعلاج

ویسے تو جوڑوں کے درد کاعموماً خواتین ہی  زیادہ تر نشانہ بنتی  ہیں۔ مگر مرد حضرات بھی اس تکلیف دہ بیماری سے بچ نہیں پاتے ۔ خاص کر وہ  خواتین و حضرات جن کو اپنے روز مرہ کے کام کرسی   پر بیٹھ کر کرنا ہوتے ہیں۔ اگر آپ  کو جوڑوں کا   درد ہے تو آپ تنہا نہیں ہیں۔  اصل میں عمر کی چوتھی اور پانچویں دہائی میں اکثر افراد اس تکلیف کا شکار ہو جاتے ہیں۔  درحقیقت عمر بڑھنے کے ساتھ ساتھ ہڈیاں بھی کمزور ہونے لگتی ہیں۔  جس کے باعث جوڑوں کا درد لوگوں کو اپنا شکار بنالیتا ہے۔ تاہم اس میں کمی لانا یا بچنا اتنا بھی مشکل کام نہیں ہے۔  یہ  بات بھی سچ ہے کہ کچھ غذائیں،  ورزشیں اور گھریلوں اشیاء آپ کے جوڑوں کے درد میں قدرتی طریقے سے نمایاں کمی لاسکتے ہیں اور ان کی میڈیکل سائنس نے بھی تصدیق کی ہے ۔ تو آپ بھی جانیئے وہ سادہ گھریلوں ٹوٹکے   جو آپ کو یا آپ کے پیاروں کو جوڑوں کے درد سے نجات دلائیں گے۔

Ghutno Ka Dard Ka Desi Ilaj

Hi, Friends, waisay to joint key dard ka nishana aksar okat females he banti hain. Magar man hazraat bi es pain wali disease say bach nahi paty. Khas kar wo khawateen o hazraat jin ko apnay rozmara kay kaam baith kar mean chair par peth kar karna hotay hain. Agar aap ko joint ka problem hai to aap tanha nahi hain. Asal mae age ki chothae or panchwe dehai main aksar afrad es takleef ka shaker ho jatay hain. Darhaqeeqat bharnay kay sath stah bone be week ho jati hain. Jin ki waja say join ka problem or dard shuru ho jata hain. Taham es main kami lana ya bachna itna bhi mushkil kaam nahi hai. Ye baat bi such hain kay some foods, exercise or home made eshiya aap kay joint kay dard mae naturally way say namaya karmi la sakty hain. Or en ke medically science nay be verify kiya hai. In the article we will share homemade joint pain treatment especially for you.

(Ginger Tea Best for Joint Pain)
ادرک سے بنی چائے

Ginger Tea for Joint Pain

ادرک سے بنی چائے سے لطف بھی لیں  اور جوڑوں کے درد سے نجات بھی ۔ دوستوں بہت سی میڈیکل ریسرچ کی رپورٹس میں یہ بات سامنے آچکی ہے۔  کہ ادرک کے اندر ایسی خاصیت ہوتی ہے جو جوڑوں کے درد کے لیے استعمال کی جانے والی ادویات کا اثر  بڑھا دیتی ہے۔ مگر ادویات کے بغیر بھی یہ کافی مفید ثابت ہوتی ہے۔ اس کیلئے آپ  ادرک کو پیس کر  صفوف کی شکل میں  استعمال کریں۔  یا اس کے باریک ٹکڑے کرکے اسے چائے کے لئے  اُبالے  جانے والے پانی میں 15 منٹ تک  ڈبو کر رکھیں۔  اس کا مستقل استعمال جوڑوں کے درد میں کمی لانے کے لیے بہترین ثابت ہوگا۔

Ginger Tea Remove Knee Pain Swells

Joro ka dard khatam karnay key leye Ginger say bani tea ka usage kary. Friends bohat si medical research report kay mutabiq ye baat samny ie hai. Kay ginger (Adrak) kay andar aisai Khasiyat hoti hai jo jodo kay dard key liye istiemal ki jani wali adweyaat ka asar barha dety hai. But without medicine bi ye kafi mufeed sabit hoti hai. Es key liye aap ko Adrak ko pees kar safoof ki shape main use karna hai. Ye es ka pieces bareek kar kay esay tea keyliye boil kary AL-mostly 15 mints tak boil kary. Is ka mustakil istemal joro kay dard main kami lani kiluy mufeed or behtar ho ga.

(Green Tea for Joint Pain)
گرین ٹی کا استعمال۔

روزانہ چار کپ گرین ٹی  استعمال کریں۔  ناظرین امریکہ کی ایک یونیورسٹی کی تحقیق کے مطابق روزانہ چار کپ گرین ٹی کے استعمال سے جسم میں ایسے کیمیکلز کی مقدار بڑھ جاتی ہے جو جوڑوں کے درد میں مبتلا ہونے کا امکان کم کردیتے ہیں۔  ایک اور تحقیق کے مطابق سبز چائے میں موجود پولی فینول نامی اینٹی آکسائیڈنٹس سوجن میں کمی لانے کی صلاحیت رکھتے  ہیں۔  جس سے پٹھوں میں آنے والی توڑ پھوڑ اور درد میں نمایاں کمی آتی ہے۔

Green Tea Best for Knee Pain

Rozana 4 cup green tea ka use kary. Friends according to USA’s University Research rozana four cup green chay kay istemal say body mae aisay chemicals ki quantity increase ho jati hain. Jo jodo kay dard mae mubtala honey ka imkaan kam kar deti hai. Aik or research kay mutabiq sabz chai mai majood polyphenol name antioxidants swell mae kami lany ki selaheyat rakhti hai. Jes say masalas mae aany wali toorh phoor or pain mae kami ki ja sakti hai.

(Jodo ka dard ka ilaj Turmeric Haldi)
ہلدی کا استعمال۔

turmeric for Joint Pain

کیا جوڑوں کے درد میں ہلدی  ا ستعمال کرنے سے فائدہ ہوتا ہے۔ یہ زرد مصالحہ اپنے اندار درد کش خوبیاں رکھتا ہے۔ کئی میڈیکل ریسرچ رپورٹ   کے مطابق  ہلدی   کا استعمال جوڑوں کے مریضوں کی تکلیف اور سوجن میں کمی لاتا ہے ۔ ایک ریسرچ میں گھٹنوں کے جوڑوں کے درد کے شکار مریضوں کو روزانہ 2 گرام یا  ایک چائے کا چمچ ہلدی استعمال کرائی گئی ۔ جس کے نتیجے میں ان کی تکلیف میں کمی آئی اور جسمانی سرگرمیوں میں اتنا اضافہ ہوا۔   جو اس مرض کے لیے ادویات کے استعمال پر ہوتا ہے۔ ہلدی کا آدھا چائے کا چمچ چاول یا سبزیوں پر روزانہ چھڑک دیں۔  یا ایسے ہی پانی کے ساتھ  نگل لیں ۔

Turmeric for Joint Pain

Kia join pain key leye Turmeric use karny say faraq parta hain. Ge han, ye zard masala apny andar dard kuch benefits rakhta hai. According to medical research, haldi ka istemal knee patients ki takleef or swell mae kami lata hai. Aik research main knee kay joint pain kay shikar mareezoo ko daily 2gram ya aik teaspoon Turmeric use karai gai. Jis key natejey main us ki takleef main kami I or physically sargarmiyoo mae itna azafa huwa. Jo es marz key liye medicines kay use par hota hai. Haldi ka half teaspoon rice ya vegetables par daily chirka day. Ya aisy he pani say nigal jay.

Foods To Reduce Joint Swelling
سوجن کی روک تھام کرنے والی غذاؤں کا استعمال ۔

ناظرین اگر آپ جوڑوں کےدرد کا شکار ہیں تو فاسٹ جنگ  اور تلی ہوئی غذا ؤں کو ترک کردیں ۔ جوڑوں کے مرض کے شکار مریضوں پر کی جانے والی ایک سویڈش ریسرچ کے مطابق جن لوگوں نے مچھلی،  تازہ پھلوں ، سبزیوں ، گندم ، ادرک ، لہسن وغیرہ پر مشتمل افراد نے اپنی خوراک کا حصہ بنا لیا   انہیں جوڑوں کی سوجن کا کم سامنا ہوا اور ان کی جسمانی صحت میں کافی حد تک بہتری آئی۔

Best Foods for Decrease Joint Swelling

Friends agar aap jori kay dard ka shikar hain to fast jung or fried foods ko tark kar day. Jodo kay marz kay shikar mareezo par ki jany wali aik Swedish research kay mutabiq jin logo nay fish, fresh foods, vegetables, wheat, ganger, or lehsan wagera par mushtamil afrad nay apni food ka hisa bana leye. Unheen joro ki swelling ka kam samna huwa or un ki jismani sehat mae kafi had tak behtari i.

Spices For Joint Pain
مصالحوں کو سونگنا۔

خوشبو دار مصالحوں کو سونگھنا بھی فائدہ مند ہے ناظرین  ایک  اور تحقیق  میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ جوڑوں کے درد میں مبتلا افراد کی تکلیف میں اس وقت  کمی آ گئی  جب اُن کو مختلف اقسام کے مصالحوں کی   خوشبو سونگھائی گئی ۔ جن میں کالی مرچ ، گرم مصالحہ اور دیگر شامل تھے ۔

Spices for Knee Pain Treatment

 Khushboo dar masaloo ko sungna bi benefits rakhta hai. Friends aik research kay mutabiq ye baat samny I hai. Key knee kay pain mae mubtala afrad ki pain main us time kami aagae jab un ko mukhtalif iqsaam ki khushboo sungai gai. Jin mae kali march, garam masala or degar shamil thay.

Jodo Ka Dard Kay Liye Bartan Dhona
برتنوں کو دھونا۔

برتنوں کو ہاتھ سے دھونا اگر کسی کے ہاتھوں کے جوڑوں میں تکلیف ہے تو یہ سننے میں بہت عجیب لگے گا ۔ مگر ہر باورچی خانے میں کیے جانے والا یہ عام سا کام درحقیقت میں  اس میں کمی لانے کا   باعث بنتا ہے۔  سب سے پہلے تو اپنے ہاتھ گرم پانی میں کچھ دیر کے لیے ڈبو دیں تاکہ پٹھوں اور جوڑوں کو سکون ملے اور انکی اکڑن کم  ہو۔  اس کے بعد برتن دھو لیں  جوڑوں کو گرم اور ٹھنڈے  کا ٹریٹمنٹ دینا ۔ آپ کو اس کے لیے دو پلاسٹک کے ڈبوں کی ضرورت ہوگی ایک میں ٹھنڈا پانی اور  کچھ آئس کیوب   بھردیں جبکہ دوسرے میں ایسا گرم پانی ہو  جس کا درجہ حرارت آپ چھونے پر برداشت کرسکیں ۔   پہلے اپنے جسم کا وہ حصہ جہاں پر تکلیف ہے ٹھنڈے پانی والے ڈبے میں ایک منٹ کے لیے ڈبو دیں اور اس کے بعد 30 سیکنڈ تک گرم پانی والے ڈبے میں متاثرہ جگہ کو ڈبو دیں۔  اس طرح ڈبوں کو پندرہ منٹ تک بدلتے رہیں مگر ہر ڈبے میں تیس سیکنڈ تک ہی متاثرہ جگہ کو ڈبوئیں ۔ لیکن اس ٹریٹمنٹ کا اختتام  ایک منٹ تک ٹھنڈے پانی والے ڈبے میں تکلیف میں مبتلا جگہ کو ڈبو کر کریں۔

Hand Join Pain Treatment – Washes Dishes

 Dishes ko hath say wash karna, agar kisi key hand key joint mae pain hai to ye sun kar kafi ajeeb lagay ga. Magar har kitchen mae keye jany wala ye aam sa kaam asal main dard main kami lany ka sabab bnta hai. Sab sy pehly to apnay hath hot water mian kuch time key lieye dabo dy. Ta key hand Manuals or joint ko sakoon milay or enki akran decrease ho. After this dishes ko wash kar ley. Joint ko hot or cold water ka treatment dain. Aap ko es key liye 2 plastic kay box ki zaroorat ho gay aik box main water or kuch ice cube ko bhar day. Or other box main aisa hot water ho jis ka temperature aap shuny par bardasht kar saky.

Sab Say pehlay apni body ka wo part cold water waly box mae dip kary jis mae zayada pain hai. Es kay bad 30 second tak hot water walay box mae dabo day. Es tarha boxes ko 15 minutes tak change kartay rahay magar har box main 30 second tak he mutasra jaga ko daboeey. But es treatment ka ikhtamam aik minute tak cold water walay box mae takleef mae mubtala walay part ko dabo kar kary.

(Use Vitamin C for Joint Pain)
وٹامِن سی کا استعمال۔

وٹامِن سی کی  مناسب مقدار کو جسم کا حصہ بنائیں ۔ وٹامِن سی نہ صرف کولین  نامی جز کی مقدار بڑھاتا ہے  جو جوڑوں کا ایک اہم عنصر ہے ۔ بلکہ  یہ جسم کے اندر موجود ایسے نقصان دہ غذا کا بھی صفایا کرتا ہے جو جوڑوں کے لیے تباہ کن ثابت ہوتے ہیں ۔ ایک تحقیق کے مطابق جو لوگ روزانہ وٹامن سی کی زیادہ مقدار کا استعمال کرتے ہیں ان میں جوڑوں کے درد میں شدت آنے کا خطرہ نمایاں حد تک کم ہو جاتا ہے ۔دِن بھر وٹامِن سی سے بھر پور اشیاء کا  استعمال کریں کیونکہ ہمارا جسم اس وٹامن کا ذخیرہ نہیں کرتا  بلکہ دوران خون کے ذریعے مطلوبہ مقامات پر پہنچا کر کچھ دیر بعد خارج کردیتا ہے ۔

Vitamin “C” for Knee Pain in Hindi

Vitamin C ki munasib miqdar ko  body ka hissa banay. Vitamin C na sirf koleen name juz ki miqdar barhata hain. Jo joro ka aik aham ansar hai. Balkay ye body kay andar majood aisay nuqsaanday ghaza ka bi safaya karta hai. Jo jodo key liye taba kun sabit hotay hain. Ail research kay mutabiq jo people daily Vitamin C ki zayada quantity ka use kartay hain un main joro kay dard main shidat any ka khatra namaiya hat tak decrease ho jata hai. Din bhar Vitamin C say bharpoor food ka use kary because hamari body es Vitamin ko store nahi karta balkay durane blood ky zarye matlooba muqamat par pohancha kar kuch time key baad kharj kar deta hai.

(Jodo Ke Dard Ke Liye Long ka Istemal)
لونگ کا استعمال۔

اپنی خوراک میں لونگ کے استعمال کو تقینی بنائیں۔  لونگ میں سوجن پر قابو پانے والا کیمیکل موجود ہوتا ہے جو کہ  جسمانی عمل پر اثرانداز ہوتا ہے جوڑوں کے درد کو کم کرتا ہے ۔ ایک تحقیق کے مطابق لونگ کا استعمال ایسے پروٹین کو جسم میں خارج ہونے سے روکتا ہے جو سوجن کو بڑھاتے ہیں۔  اس کے علاوہ لونگ میں اینٹی  آکسیڈنٹ موجود ہوتے ہیں جو ہڈیوں کو کمزور ہونے کے عمل  کو سست کردیتے ہیں۔  لونگ  کا آدھے سے ایک چائے کا چمچ روزانہ استعمال جوڑوں کے درد میں کمی کے لیے بہترین ہوتا ہے۔

LONG – Ghutno Ka Dard Ka Desi Ilaj

Apni food main LONG kay estemal ko yaqeeni banay. Long main swell par qaboo pany walay Chemical majood hota hai. Jo key jismani amal par asar andaaz hota hai jori kay dard ko decrease karta hai. Aik tehqeeq kay mutabiq long  ka estemaal aisay protein ko body main kharj honay say rokta hain jo swell ko increase karty hain. Es kay alawa long main ante-oxidant majood hotay hain jo bones ko week honey kay amal ko sust kar dety hain. long ka half say aik spoon rozana estemal joro kay dard main kami key leye bahtreen hota hai.

Omega 3 Fatty Acids For Joint Pains
اومیگا تھری فیٹی ایسڈز کا استعمال ۔

اومیگا  تھری فیٹی ایسڈز تکلیف دہ جوڑ کو راحت پہنچانے کے لیے بہترین ہوتے ہیں ۔ ٹھنڈے پانیوں کی مچھلیوں میں اس کیمیکل کی بہت زیادہ مقدار  ہوتی ہےتاہم اس کیمیکل کے سپلیمنٹ بھی دستیاب ہیں۔  جو ڈاکٹروں کے مشورے سے استعمال کیے جاسکتے ہیں ۔ اس کے علاوہ کنولا آئل میں بھی امیگا تھری فیٹی ایسڈز موجود ہوتے ہیں ۔

Usage of Omega 3 Fatty Acids

Omega 3 fatty acids pain da joint ko rahat pohanchaty key leye bahtreen hotay hain. Cold Water wali Fishes main es chemicals ki bohat sari quantity majood hoti hai. Takey es chemical kay supplements bi dasteyab hain. Jo Doctors ki opinion say estemal kieye ja saktay hain. Es kay alawa Canola Oil main bi Omega 3 Fatty Acids majood hotay hain.

ادرک کا مرہم۔

ادرک کا مرہم بنا کر لگائیں پیسی ہوئی ادرک کو اس جوڑ پر لگائیں جس پر تکلیف ہو رہی ہے۔  تو اس سے جسم  میں ایک دماغی جز کی کمی ہوتی ہے جو درد کی لہر آپ کے مرکزی اعصابی نظام تک پہنچاتی ہے ۔

Ginger Paste

Adrak ka Paste bana kar lagay, pessi hui ginger ko es joint par lagay jis par pain ho rahi hai. To es say body main aik damage juz ki kami hotai hai. Jo dard ki lehar aap kay marzaki “Nervous System” tak pohanchati hai.

Ginger paste banaye ka tariqa
ادرک کا پیسٹ بنانے کا طریقہ۔

ادرک کے مرہم کو بنانے کے لیے تازہ ادرک کے تین انچ کے ٹکڑے کو پیس لیں۔  جس میں کچھ مقدار میں زیتون کا تیل شامل کرکے اسے پیسٹ کی شکل دے دیں۔  اور پھر تکلیف دہ جوڑ پر لگائیں اس کے بعد اس جگہ کو کسی پٹی سے دس سے پندرہ منٹ تک ڈھانپ کر رکھیں۔

Ginger Paste Banany ka Tarika

Adrak kay paste ko banany key lyey fresh ginger kay 3 inch kay pieces ko pees lay. Jis main kuch miqdar “Olive Oil” bi shamil kar kay esay paste ki shape dy dain. Or phir pain da joint par laga lay. Es kay bad es body part ko kisi patti say 10 to 15 minutes tak dhanp kar rakhy.

Walk Daily On Grass
ننگے پاؤں چہل قدمی کریں۔

کسی گھاس والے مقام پر ننگے  پاؤں  چہل قدمی کرنے سے   گھٹنوں کے درد میں 12 فیصد تک کمی ہوتی ہے ۔ ایک امریکی تحقیق کے مطابق کھلی فضا میں کچھ دیر تک ننگے پاؤں گھومنا  تکلیف میں کمی کا باعث بنتا ہے۔  مگر اپنی ایڑیوں کو  اوپر اٹھا کر   یا پنجوں کے بل چلنے کی کوشش نہ کریں۔  کیونکہ اس  سے جوڑوں پر مزید دباؤ بڑھ جاتا ہے۔

Walk on Grass on Daily Basis

Kisi Grass waly muqam par nangay paon walk karnay say knee kay dard main 12 % tak kami hoti hai. Aik American Research kay mutabiq open air main kuch der tak nangay paoon khoomna pain main kami ka baes bnta hai. Magar apni aeriyoo ko upper utha kar ya punjoo kay bal walk ki koshish no kary. Because es say joint par mazeed pressure barh jata hai.

مصالحے دار غذا کا استعمال کریں ۔

لال مرچ ، ہلدی اور ادرک میں   سوجن میں کمی لانے والے اجزاءموجود ہوتے ہیں ۔ اور وہ ایسے دماغی سگنلز کو بھی  بلاک کر دیتے ہیں جو درد کی لہریں ٹرانسمٹ کرتے ہیں۔  تو مناسب مقدار میں مرچ مصالحے والی   غذائیں بھی اس تکلیف کے لیے بہترین ہیں ۔ یا مرچوں سےکوئی چٹنی  تیار کرلیں جو آپ کی میز پر ہر وقت موجود ہو۔

Usage of Masala Dar Food

Red chili (Laal Mirch), Turmeric (Adrak), Ginger (Adrak) main swells mae kami lany wala ajza majood hoty hain. Or wo aisy demag signals ko be block kar dety hain. Jo dard ki waves transmit karty hain. To munasib quantity main march masalay wali ghazain bi es trouble kay leye bentreen hain. Ya phir Chilli say koi chatni tayar kar ley. Jo aap ki maiz par har waqat mojood ho.

مچھلی کے تیل سے بنے کیپسول۔

Omega 3 for Joint Pains

ایک برطانوی تحقیق کے مطابق مچھلی کے تیل سے بنے کیپسول بھی جوڑوں میں ہونے والی تکلیف کا باعث بننے والے عمل کو سست کردیتے ہیں ۔ اور  درد کی شدت میں کافی کمی آ جاتی ہے ۔ مچھلی کے عام تیل سے بنے کیپسول کا استعمال بھی اس حوالے سے فائدہ مند ثابت ہو سکتا ہے ۔

Fish oil Capsule

Aik British research key mutabiq fish oil say banay huway Capsule bi joint main honey wali takleef ka baes banany wali amal ko sust kar dety hain. Machli kaya aam tail say bany capsule ka istemal bhi es hawalay say faydamand sabit ho sakta hai.

Increases in Calcium Usage
کیلشیم کا استعمال زیادہ کریں ۔

بہت کم مقدار میں کیلشیم  کا استعمال ہڈیوں کی کمزوری کا خطرہ بڑھا دیتا ہے ۔ جس کے نتیجے میں جوڑوں کے درد کی جانب سفر بھی تیز رفتار ہوجاتا ہے ۔ پچاس سال کی عمر کے بعد تمام خواتین کو روزانہ 1200 ملی گرام کیلشیم  کا استعمال یقینی بنانا چاہئے ۔ دودھ یا اس سے بنی مصنوعات کیلشیئم کے حصول کا بہترین ذریعہ ہے ۔ گوبھی اور سبز پتوں والی سبزیوں میں بھی کیلشیم پایا جاتا ہے جو مقدار کے لحاظ سے دودھ سے کم   ہوتا ہے۔  مگر یہ جسم میں زیادہ آسانی سے جذب ہوجاتا ہے۔

Calcium Ka Usage Zayada kar Dain

Bohat kam quantity main Calcium ka estemaal bonds (Hadeyoo) ko week kar deta hai. Jis kay nateejay main joroo key dard ki janib safar bhi tez raftaar ho jata hain. 50 year ki umar kay bad tamam women ko rozana 1200 ml calcium ka esimal yaqeeni banana chaheye. Milk ya es say bani foods calcium kay hasool ka behtareen zariya hai. Gobi or green pattoon wali vegetables main bi calcium paya jata hai. Jo quantity kay lehaj say dood say kam hota hai. Magar ye jisam main zayada assan say jazb ho jata hai. Hum Umeed karty hain kay aap ko ye hummari ye Health Tip “Ghutno Ka Dard Ka Desi Ilaj” pasand i ho ge.

پوسٹ کو شیئر کریں۔۔
  • 6
    Shares

جوڑوں کے درد کا گھریلوں اور سستا اعلاج” ایک تبصرہ

تبصرے بند ہیں